مذہبی انتہا پسند اور ہمارے کوتاہ بین فیصلہ ساز

جھنگ، کبیر والا، خانیوال، خیرپور اور اب کراچی کے مختلف حلقوں میں کھڑے کیے گئے راہ حق پارٹی کے 250 سے زائد امیدوار یہ سمجھانے کے لیے کافی ہیں کہ انتہاءپسند عناصر اب اپنے مقاصد کی تکمیل کے لیے بلٹ کے ساتھ ساتھ بیلٹ کو بھی بطور ہتھیار استعمال کررہے ہیں۔

مرتے ہیں آرزو میں مرنے کی !!

وفاقی حکومت نے دوران ملازمت وفات پا جانے والے سرکاری ملازمین کے لیے جاری ہونے والے امدادی پیکج میں تین سو فیصد تک اضافہ کردیا ہے ۔ اس خبر کے جاری ہونے کے بعد درجنوں بیمار ملازمین خوشی سے وفات پا گئے اور گریڈ ایک تا چار کے غریب ملازمین نے اپنی لمبی زندگی کے لیے دعائیں مانگنا چھوڑ دیں۔

ہمار اثقافتی ورثہ ؟؟

شمالی شام اور عراق کے کچھ علاقوں پر گزشتہ دو سال سے زائد عرصے سے وحشیوں کا قبضہ ہے اور اُن کے زیر نگیں علاقوں میں نہ تو سالوں کی عمر پانے والے انسان محفوظ ہیں اور نہ ہی صدیوں کی عمر پانے والے آثارِ قدیمہ۔

میں سبین محمود کو نہیں جانتا تھا

میں واقعی سبین محمود کو نہیں جانتا تھاجب تک ان کے قتل کی اطلاع مجھ تک نہیں پہنچی تھی مجھے علم ہی نہیں تھا کہ کوئی سماجی کارکن کراچی میں سبین محمود نام کی بھی ہے، جس کا اپناکوئی کیفے ہے، جو مختلف عنوانات پر سیمینار کرواتی ہے، جو عموماً سول سوسائٹی کے اجتماعات میں جایا کرتی ہے، یہ سب باتیں اس خاتون کے قتل کے بعد میرے علم میں آئی ہیں۔